ہفتہ، 29 مارچ، 2014

10 جون, 2013 آج کی بات .

10 جون, 2013
آج کی بات .

دوستیاں ،دعوتیں ،ڈکیتیاں ....

کل پھر احباب چورنگی کا ملاپ ہوا منزل مقصود پھر سے زنگر تھا درمیان میں "حکیم کی ورکشاپ " بھی آئ دو تین مریضوں کی ڈینٹنگ پینٹنگ ہو رہی تھی اس سے پہلے کہ ہم دواے دل مانگ لیں "وہ دکان اپنی بڑھا گۓ"نیلے کا انتظار کرتے ہوے جب ہم لوگ نیلوں نیل ہو گۓ تو پھر "عازم زنگر " ہونے کا فیصلہ کیا گیا اب کی بار عباس حسین بھائی کی جیب پر بار پڑنے والا تھا ......

"یونائیٹڈ کوئین" یہ فاسٹ فوڈ شاپ کا نام ہے جہاں دو کنوارے اور ایک شدہ یونائٹ ہوے تھے دو کو کوئین کی آرزو تھی اور ایک کو انتھونی کوئین کی ...

دوستیاں بھی عجیب ہیں دوست ملتے ہیں بچھڑ جاتے ہیں پھر کچھ نۓ دوست بن جاتے ہیں لیکن ایسے چند ہی دوست ہوتے ہیں جنھیں دوست کہا جا سکے ....."دوست ہوتا نہیں ہر ہاتھ ملانے والا "

دوستوں کی ہر محفل نئی تازگی لاتی ہے .....دوست اچھا لگتا ہے اور اگر دعوت دے تو زیادہ اچھا لگتا ...

بحر حال کھایا "زنگر " اور پیا ایک دوسرے کا دماغ .

اب آپ سوچینگے ڈکیتیاں کہاں سے آ گئیں.....

تو جناب ایک ڈکیت ضرور آیا اور اس کے ساتھ اسکی ڈکیتیاں بھی تھیں اسکی بدقسمتی اور متوقع لٹنے والے کی خوش قسمتی جو بہادری کے ساتھ ہی آتی ہے .ڈکیت قابو آ گیا اور موب جسٹس جو ہمارے ہاں چیف جسٹس کے بعد دوسرا مشہور جسٹس ہے کی عدالت میں قابل گردن زدنی قرار پایا اور سزا پر فوری عمل در آمد بھی ہوا ......گو بعد میں اسکے بھائی بند بلکہ پیٹی بند اسکی مدد کو آ گے تھے لیکن یہ معلوم نہ ہو سکا کہ روح نے قفس عنصری کو چھوڑ کر پرواز کی یا نہیں ......

تو جناب قصہ المختصر .......زنگر کھایا ڈاکو کی پٹائی دیکھی بعد میں آئسکریم بھی کھائی اور کچھ خوشگوار یادوں کے ساتھ یہ محفل اختتام پذیر ہوئی.....با وجود کوشش شدید نیلے صاحب نہ پوھنچ سکے (اب انپر جرمانہ ڈیو ہے ) اور ہم نے انکی یادوں سے کام چلایا .......اگلی ملاقات کے احوال تک ...حافظ خدا تمہارا

حسیب احمد حسیب
ایک تبصرہ شائع کریں